251767934300753

ہلمند: لشکرگاہ-قندہار راستہ بدستور بند، ٹینک ودو گاڑیاں تباہ، 15 اہلکار ہلاک وزخمی

صوبہ ہلمند کے صدر مقام لشکرگاہ شہر میں قومی شاہراہ دشمن کے رفت وآمد کے لیے بند، جب کہ مارجہ وناد علی اضلاع میں فوجیوں پر حملہ ہوا۔

تفصیل کے مطابق گزشتہ روز سے لشکرگاہ-قندہار قومی شاہراہ دشمن کے رفت وآمد کے لیے بدستور بند ہے، ناکام دشمن نے راستہ کھولنے کی خاطر مجاہدین پر حملہ کیا، جن پر جوابی حملوں ودھماکوں سے 2 رینجر گاڑیاں تباہ اور ان میں سوار 9 اہلکار ہلاک وزخمی ہوئے۔

دوسری جانب اتوار کے روز عصر چار بجے کے لگ بھگ عینک کے علاقے میں واقع فوجی چوکی پر مجاہدین نے حملہ کیا، جس کے نتیجے میں ٹینک تباہ اور اس میں سوار اہلکاروں کو ہلاکتوں کا سامان ہوا۔

ضلع مارجہ سے اطلاع ملی ہے کہ اتوار کے روز عصر چار بجے کے لگ بھگ ڈراب چارراہی کے علاقے میں واقع چوکی میں تعینات اہلکاروں کو مجاہدین نے سنائپر گن سے نشانہ بناکر پانچ اہلکاروں کو قتل کردیے۔

جہادی ذرائع نے ضلع ناد علی سے اطلاع دی کہ اتوار اور سنیچر کی درمیانی شب عشاء کے وقت مجاہدین نے ایک فوجی کو لیزر گن سے مار ڈالا۔

اضف رد

لن يتم نشر البريد الإلكتروني . الحقول المطلوبة مشار لها بـ *

*